اہم خبریںعالمی خبریں

طوفانی بارش کے ساتھ مصر میں آسمان سے ٹپکے ہزاروں زہریلے بچھو، کاٹنے سے 500 افراد اسپتال میں داخل، 3 جاں بحق

ان دنوں مصر میں لوگ زہریلے بچھوؤں کی قہر کا سامنا کر رہے ہیں۔ خاص طور پر ملک کے جنوبی علاقے اسوان میں اس وقت ہزاروں بچھو اچانک ٹپک پڑے ہیں۔بتایا جا رہا ہے کہ یہ بچھو دو روز قبل ہونے والی طوفانی بارش سے آسمان سے ٹپک پڑے ہیں

ان زہریلے بچھو کے ڈنک سے اب تک 3 افراد ہلاک ہو چکے ہیں اور 500 کے قریب لوگ ہسپتال پہنچ چکے ہیں۔بل میں پانی داخل ہونے کے بعد کئی سانپ بھی نکل آئے ہیں جس کی وجہ سے پریشانی میں اضافہ ہوگیا ہے۔

مصری وزارت صحت کے مطابق اسوان کے علاقے میں ہر سال ایک انچ بارش ہوتی ہے لیکن اس سال یہاں غیر معمولی طور پر شدید بارش ہوئی ہے اور برف بھی پڑی ہے۔

بچھو عموماً دن میں دراڑوں اور چٹانوں کے نیچے چھپ جاتے ہیں اور رات کو نکلتے ہیں۔ وہ رات کو چھوٹی چھپکلیوں اور کیڑوں کا شکار کرتے ہیں۔

ابھی تک مرنے والوں کے بارے میں کوئی تفصیلات سامنے نہیں آئی ہیں۔

مصر میں بڑی تعداد عرب نسل مہلک بچھو پائی جاتی ہے اور انہیں دنیا میں سب سے خطرناک سمجھا جاتا ہے۔ان بچھوؤں کے ڈنک مارنے پر فوراً شدید درد شروع ہو جاتا ہے، سوجن اور دانے نکل آتے ہیں۔ اگر 1 گھنٹے کے اندر ڈنک کا علاج نہ کیا جائے تو وہ شخص مر سکتا ہے۔

مصری بچھو پیلے رنگ کے ہوتے ہیں اور دم کافی موٹی اور قدرے کالی ہوتی ہے۔اس تباہی کے پیش نظر ڈاکٹروں کی چھٹیاں منسوخ کر دی گئی ہیں۔مصر کی وزارت صحت کے ایک نمائندے نے بتایا کہ بچھو کے کاٹنے کے بعد اسوان یونیورسٹی میں 89 افراد کو اسپتال میں داخل کرنا پڑا۔یہی نہیں سینکڑوں افراد شہر کے دیگر اسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔مریضوں کی بڑی تعداد کے پیش نظر چھٹی پر گئے ڈاکٹروں کو واپس بلایا گیا ہے۔

تمام اسپتالوں کو بچھو کے زہر سے بچاؤ کے زہر کی اضافی فراہمی بھی کی گئی ہے۔ بچھو کے کاٹنے کے نتیجے میں لوگوں کی بینائی دھندلی ہو گئی ہے، جس سے شہر کے کچھ حصوں پر ٹریفک کو روکنا پڑا ہے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button