اہم خبریں

جامعہ میں فائرنگ کرنے والے ملزم نے مسلم خواتین کا اغوا کرنے کے لئے اکسایا،ویڈیو وائرل


دہلی (قومی ترجمان /ایجنسیاں) واضح ہوکہ نیوز رپورٹ سے ملی جانکاری کے مطابق ملک کی راجدھانی دہلی اور آس پاس کے علاقوں میں دسمبر 2019 سے فروری 2020 تک چلے شہریت ترمیمی قانون (CAA Bill)مخالف احتجاج کے دوران جامعہ ملیہ اسلامیہ کے پاس فائرنگ کی گئی تھی۔گولی چلانے والا ملزم ایک بار پھر سرخیوں میں ہے۔ نیوز ١٨ میں شائع رپورٹ کے مطابق اس نے ہریانہ کے پٹودی میں ایک مہاپنچایت میں حصہ لیا۔جس میں اس نے بھیڑ کو مسلم خواتین کو اغوا کرنے کے لئے اکسایا۔ساتھ ہی مسلمانوں پر حملے کرنے کی بھی بات کہی۔یاد رہے کہ ہریانہ کے پٹودی میں مذہب تبدیلی،لو جہاد،آبادی کنٹرول جیسے موضوع کو لے کر ایک مہاپنچایت بلائی گئی تھی۔جس کی ویڈیو وائرل ہوگئی ہے،اس میں ملزم نوجوان قابل اعتراض باتیں کہتا ہوا سنائی پڑ رہا ہے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button