اہم خبریںبہاربین ریاستی خبریں

بہار میں عجب پیار کی غضب کہانی، شوہر نے بیوی کی اس کے بوائے فرینڈ سے کرادی شادی

جموئی : 29 /دسمبر- جموئی بہار میں شوہر کا فلمی انداز میں اپنی بیوی کی شادی اس کے عاشق سے کروانے کا واقعہ زیر بحث ہے۔ اس شادی کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہے جس میں شوہر وکاس اپنی بیوی شیوانی کی سب کے سامنے اس کے عاشق سچن سے شادی کراتے نظر آ رہے ہیں۔بتایا جا رہا ہے کہ یہ وائرل ویڈیو بنگلور کا ہے لیکن اس کا تعلق جموئی ضلع سے ہے۔ اس کیس کو 1999 کی بالی ووڈ فلم ہم دل دے چکے صنم کی کہانی سے جوڑ کر دیکھا جا رہا ہے جس میں اداکار اجے دیوگن اپنی اہلیہ ایشوریا رائے کی شادی اپنے بوائے فرینڈ سلمان خان سے کروانا چاہتے تھے تاہم ایسا نہ ہو سکا۔

بیوی کی عاشق سے شادی کا یہ معاملہ ایک ہفتہ قبل کا بتایا جا رہا ہے۔حالانکہ نیوز 18 نے اس وائرل ویڈیو کی تصدیق نہیں کی ہے۔

ویڈیو میں وکاس اپنی بیوی کی اس کے عاشق سے اپنی مرضی سے شادی کرانے کی بات کر رہے ہیں۔ساتھ ہی وہ یہ بھی کہہ رہے ہیں کہ انہیں شیوانی کے پیار کے بارے میں ایک تصویر ملنے کے بعد معلوم ہوا۔ ان کے مطابق شیوانی کا شادی سے پہلے سچن کے ساتھ افیئر تھا۔

وکاس جموئی ضلع کے سونو تھانہ علاقے کے تحت بلتھر گاؤں کا رہنے والا ہے۔اس کی بیوی شیوانی کماری جموئی کے کھیرا تھانہ علاقے کے دانسنگھ ڈیہ گاؤں کی رہنے والی ہے۔ وکاس کی پہلی بیوی کی موت کے بعد دو سال قبل اس کی شادی شیوانی سے ہوئی تھی۔

وہیں شیوانی ماضی میں جس لڑکے سے پیار کرتی تھی وہ بھی جموئی ضلع کے جھاجھا تھانہ علاقے کے کبار گاؤں کا رہنے والا ہے۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق وکاس شادی کے بعد بنگلور میں شیوانی کے ساتھ رہ رہے تھے۔ یہاں وہ ایک پرائیویٹ کمپنی میں کام کرتا ہے۔ شیوانی کی تلاش میں اس کا عاشق سچن بنگلور آگیا، جہاں اس کے چچا ایک کمپنی میں کام کرتے ہیں۔

ایک دن جب وکاس کو معلوم ہوا کہ شیوانی اس کے عاشق سے ملتی جلتی ہے تو اس نے دونوں کو بٹھا کر سمجھایا اور سخت لہجے میں انہیں دوبارہ نہیں ملنے کے لیے کہا۔بتایا جا رہا ہے کہ اس بات کو لے کر وکاس اور سچن کے درمیان کئی دن جھگڑے اور لڑائی بھی ہوئی تھی۔ لیکن پھر بھی شیوانی نے سچن سے ملنا بند نہیں کیا۔ پھر ان سب چیزوں کو دیکھتے ہوئے وکاس نے اپنی بیوی کی اس کے عاشق سے شادی کرنے کا سوچا۔ وائرل ہو رہی ویڈیو میں اس کا عاشق شیوانی کی مانگ میں سندور بھر رہا ہے۔ اس دوران وکاس بھی وہاں موجود رہا۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button