اسپورٹساہم خبریںدہلیعالمی خبریں

39 سال میں پہلی بار ون ڈے میں ویسٹ انڈیز کے خلاف کلین سویپ، پہلی بار ون ڈے سیریز میں ویسٹ انڈیز کو دی شکست ، میچ 96 رنز سے جیتا

  • روہت کی کپتانی میں ہندوستان نے تاریخ رقم کی: 39 سال میں پہلی بار ون ڈے میں ویسٹ انڈیز کے خلاف کلین سویپ، میچ 96 رنز سے جیتا

نئی دہلی، 11 فروری – شریاس ایر اور رشبھ پنت کے درمیان سنچری شراکت اور گیند بازوں کی ایک اور شاندار کارکردگی کی بدولت ہندوستان نے جمعہ کو تیسرے اور آخری ون ڈے میں ویسٹ انڈیز کو 96 رنز سے شکست دے کر تین میچوں کی سیریز میں -0 کلین سویپ کیا۔ پہلے بیٹنگ کرنے آئی ہندوستانی ٹیم کا ٹاپ آرڈر لڑکھڑاتا رہا۔

کووڈ سے صحت یاب ہونے کے بعد پہلا میچ کھیلتے ہوئے ایر (111 گیندوں میں 80 رنز، نو چوکے) اور پنت (54 گیندوں میں 56 رنز، چھ چوکے، ایک چھکا) نے یہاں سے چوتھے وکٹ کے لیے 110 رنز جوڑ کر ہندوستانی اننگز کو آگے بڑھایا۔ دیپک چاہر (38 گیندوں پر 38، چار چوکے، دو چھکے) اور واشنگٹن سندر (34 گیندوں پر 33، دو چوکے، ایک چھکا) نے ساتویں وکٹ کے لیے 53 رنز بنائے اور ہندوستان نے 50 اوورز میں تمام وکٹیں گنوا کر 265 رنز بنائے۔

یہ بھی پڑھیں

آدھار کارڈ فرنچائز: مفت میں آدھار سینٹر کی فرنچائز لے کر بڑی رقم کمائیں! یہ ہے طریقہ

پچ میں ‘سیم موومنٹ’ اور باؤنس تھا اور ہندوستانی گیند بازوں نے بھی اس کا فائدہ اٹھاتے ہوئے ویسٹ انڈیز کو 37.1 اوورز میں 169 رنز پر سمیٹ دیا۔ یہ پہلا موقع ہے جب ہندوستان نے ویسٹ انڈیز کو ون ڈے سیریز میں شکست دی ہے۔ بھارت نے اسی مقام پر کھیلا گیا پہلا میچ چھ وکٹوں سے اور دوسرے میچ میں 44 رنز سے جیتا تھا۔ اب ان دونوں ٹیموں کے درمیان 16 فروری سے کولکتہ میں تین میچوں کی ٹی ٹوئنٹی سیریز کھیلی جائے گی۔ مشہور ہندوستانی گیند باز کرشنا (27 رن پر 3)، محمد سراج (29 رن پر 3)، دیپک چاہر (41 رن پر 2) اور کلدیپ یادیو (51 رن پر 2) نے وکٹیں حاصل کیں۔

یہ بھی پڑھیں

جانیں PAN کو ADAHAR CARD سے لنک کرنے کا سب سے آسان طریقہ، آن لائن (Online) اور (آف لائن) Offline دونوں

ویسٹ انڈیز کی ٹیم سات وکٹوں پر 82 رنز پر آل آؤٹ ہوگئی لیکن تین نچلے آرڈر کے بلے باز اوڈین اسمتھ (18 گیندوں پر 36، 3 چوکے، 3 چھکے)، الزاری جوزف (56 گیندوں پر 29) اور ہیڈن والش (38 گیندوں پر 13) تھے۔) نہ صرف بھارت کا انتظار بڑھا بلکہ شکست کا مارجن بھی کم کر دیا۔ تاہم ویسٹ انڈیز کے ٹاپ آرڈر بلے بازوں کے پاس ہندوستان کے مخلوط رفتار اور اسپن حملے کا کوئی جواب نہیں تھا۔ سراج اور چاہر نے پہلے پانچ اوورز میں شائی ہوپ (پانچ)، برینڈن کنگ (14) اور شمرہ بروک (صفر) کو آؤٹ کرکے کیریبین ٹیم کو ہلا کر رکھ دیا۔

یہ بھی پڑھیں

جانیں ای-شرم کارڈ کے لیے کون-کون دے سکتا ہے درخواست ؟ اور کیا ہیں ای شرم کارڈ کے فائدے

ڈیرن براوو (19) اور کپتان نکولس پورن (34) نے آٹھ اوورز تک وکٹیں نہ گرنے دیں۔ کرشنا نے براوو اور جیسن ہولڈر (چھکے) جبکہ اسپنر کلدیپ نے پوران اور فیبین ایلن ( صفر) کو آؤٹ کرکے ہندوستان کی بڑی جیت کو یقینی بنایا۔ اس سے قبل ہندوستان کی شروعات اچھی نہیں تھی۔ کپتان روہت شرما (13) اور سابق کپتان ویرات کوہلی (نیل) کے تین گیندوں کے اندر پویلین لوٹنے اور چوتھے اوور میں شیکھر دھون (10) کے جلد آؤٹ ہونے کے بعد سکور تین وکٹ پر 42 تک کم ہو گیا۔ جوزف (54 رن پر 2 دے کر) نے ہندوستانی ٹاپ آرڈر کو ہلا کر رکھ دیا جبکہ لیگ اسپنر والش (59 رن پر 2) نے ایر اور پنت کو آؤٹ کیا۔ آل راؤنڈر ہولڈر (34 رنز پر 4 وکٹ) نے لوئر آرڈر کو سمیٹنے میں اہم کردار ادا کیا۔

جوزف نے ون ڈے کے اہم کھلاڑی روہت اور کوہلی کو آؤٹ کرکے ہندوستانی کیمپ میں ہنگامہ برپا کردیا تھا۔ جب روہت نے اپنے فٹ ورک کا استعمال کیے بغیر گیند کو وکٹوں پر مارا تو کوہلی نے گیند کو ٹانگ سائیڈ پر فلک کرنے کی کوشش میں وکٹ کیپر شائی ہوپ کو کیچ دے دیا۔ دو وکٹوں پر 16 رنز بنائے۔ اس سیریز میں پہلی بار کھیل رہے دھون نے 15ویں گیند کا سامنا کیا اور کیمار روچ کو چھکا لگا کر کھاتہ کھولا لیکن وہ اوڈین اسمتھ کی آف اسٹمپ کے باہر جانے والی شارٹ پچ گیند پر سلپ میں کیچ ہو گئے۔ ہندوستان اس میچ میں چار تبدیلیوں کے ساتھ گیا اور تین ابتدائی وکٹوں کے بعد، ائیر کو چوتھے نمبر پر بیٹنگ کے لیے بھیجا گیا، کیونکہ KL راہول چوٹ کی وجہ سے کھیلنے سے قاصر تھے۔ پنت پانچویں نمبر پر اترے اور دونوں نے درمیانی اووروں میں حکمت عملی کے ساتھ بلے بازی کی۔

یہ بھی پڑھیں

مفت راشن دینے سے کرے انکار، تو اس نمبر پر کریں کال، فوری ہوگی کارروائی

ایر اور پنت دونوں نے اسپنرز کو آسانی سے کھیلا۔ پنت نے بھی فیبین ایلن پر چھکا لگایا۔ ائیر نے اس دوران اپنی نویں جبکہ پنت نے اپنی پانچویں ون ڈے نصف سنچری مکمل کی۔ والش نے ان دونوں کو اپنے لیگ اسپن کے جال میں پھنسا دیا۔ پنت، آف اسٹمپ کے قریب سے لیٹ کٹ کھیلنے کی کوشش کرتے ہوئے، وکٹ کیپر کو کیچ دے بیٹھے جب کہ ائیر نے اضافی کور پر لانگ شاٹ کھیلنے کی کوشش کی، لانگ آف پر کیچ ہوا۔ اس دوران ایلن نے سوریہ کمار یادو (چھ) کو پویلین بھیجا۔ چاہر نے ماضی قریب میں اپنی بلے بازی کے ساتھ جوش دکھایا ہے اور ایک بار پھر اس نے اہم کردار ادا کیا۔ ہولڈر کا پہلا شکار بننے سے پہلے چاہر نے ایلن اور والش پر چھکے لگائے۔ والش پر انہوں نے لگاتار دو چوکے اور چھکے لگائے۔ سندر نے بھی ہولڈر کی گیند پر اضافی کور پر کیچ ہونے سے پہلے آخری اوور میں جوزف کو چھکا لگایا۔

ان خبروں کو بھی پڑھیں

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button