اتر پردیشاہم خبریںدہلی

10 فروری سے7 مارچ تک یوپی انتخابات کے EXIT POLL پر پابندی، الیکشن کمیشن کا بڑا فیصلہ

  • ایگزٹ پول پر 10 فروری کی صبح 7 بجے سے 7 مارچ کی شام 6.30 بجے تک پابندی رہے گی۔

10 فروری سے7 مارچ تک یوپی انتخابات کے EXIT POLL پر پابندی، الیکشن کمیشن کا بڑا فیصلہ

نئی دہلی، 30 جنوری (قومی ترجمان) الیکشن کمیشن نے ہفتہ کو ایک بڑا فیصلہ لیتے ہوئے اتر پردیش اسمبلی انتخابات کے پیش نظر ایگزٹ پول پر پابندی لگا دی ہے۔ کمیشن کی جانب سے لگائی گئی یہ پابندی 10 فروری سے 7 مارچ تک جاری رہے گی۔ اتر پردیش کے چیف الیکٹورل آفیسر اجے کمار شکلا کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ یوپی اسمبلی انتخابات کے ایگزٹ پول پر 10 فروری کی صبح 7 بجے سے 7 مارچ کی شام 6.30 بجے تک پابندی رہے گی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ’’ایگزٹ پولز نہ تو پرنٹ میڈیا کے ذریعے شائع کیے جائیں گے اور نہ ہی اسے اس عرصے کے دوران الیکٹرانک میڈیا پر نشر کرنے کی اجازت ہوگی۔ اس اصول پر عمل نہ کرنے والے کو دو سال تک قید ہو سکتی ہے۔ اس کے ساتھ ہی بھاری جرمانہ بھی عائد کیا جا سکتا ہے۔

سیاسی طور پر اہم اتر پردیش میں اس بار سات مرحلوں میں پولنگ ہوگی اور اس کا آغاز ریاست کے مغربی حصے کے 11 اضلاع کی 58 سیٹوں پر 10 فروری کو ووٹنگ کے ساتھ ہوگا جب کہ ووٹوں کی گنتی 10 مارچ کو ہوگی۔

ان خبروں کو بھی پڑھیں

سماج وادی پارٹی نے رائے شماری بند کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

اہم بات یہ ہے کہ سماج وادی پارٹی (ایس پی) نے الیکشن کمیشن سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ نیوز چینلز پر دکھائے جانے والے رائے شماری کو روکے اور اسے انتخابی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی قرار دے ۔ اس کے پیش نظر ایس پی کے اترپردیش صدر نریش اتم پٹیل نے 23 جنوری کو اس سلسلے میں چیف الیکشن کمشنر کو ایک خط لکھ کر مختلف نیوز چینلوں پر دکھائے جانے والے رائے شماری کے نشریات پر فوری پابندی لگانے کا مطالبہ کیا تھا۔

سماج وادی پارٹی نے کمیشن کو لکھے خط میں کیا کہا؟

پٹیل نے خط میں کہا تھا کہ اتر پردیش قانون ساز اسمبلی انتخابات کی تاریخوں کے اعلان کے بعد سے بہت سے چینل رائے دہی دکھا رہے ہیں، جس سے رائے دہندگان الجھن میں پڑ رہے ہیں اور الیکشن متاثر ہو رہا ہے۔

یہ ایکٹ ماڈل ضابطہ اخلاق کی صریح خلاف ورزی ہے۔ پٹیل نے مطالبہ کیا تھا کہ آزادانہ، منصفانہ اور بے خوف انتخابات کرانے کے لیے نیوز چینلز کے ذریعے دکھائے جانے والے رائے شماری کو فوری طور پر روکا جائے۔

اکھلیش یادو نے Opinion Poll کو افیم پول بتایا تھا

سماج وادی پارٹی (ایس پی) کے صدر اکھلیش یادو نے بھی 26 جنوری کو نیوز چینلوں پر دکھائے جانے والے اتر پردیش اسمبلی انتخابات کے رائے شماری پر طنز کیا اور اسے ‘افیون پول’ قرار دیا تھا ۔ یادو نے یوم جمہوریہ کے موقع پر اپنے خطاب میں کہا تھا ‘بی جے پی لیڈر اپنے بیانات سے الیکشن کو ایک اور سمت میں لے جانا چاہتے ہیں۔ واٹس ایپ پر ہر طرح کی غلط فہمیاں پھیلائی جا رہی ہیں۔ رائے شماری دراصل ایک افیون پول ہے۔ ہمیں اس سے محتاط رہنا ہوگا۔

ان خبروں کو بھی پڑھیں

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button