ارریہارولاہم خبریںاورنگ آبادبہارپٹنہتعلیم و روزگارکشن گنجویشالی

محکمہ تعلیم : بہار میں اساتذہ کی بحالی کے لئے حکومت نے اٹھایا بڑا قدم

پٹنہ ،14/ مارچ (قومی ترجمان) محکمہ تعلیم نے اساتذہ تقرری کو لیکر بڑا قدم اٹھاتے ہوئے ہائی کورٹ سے اساتذہ کی تقرری جاری رکھنے کے لیے نظر ثانی کی درخواست کی ہے ۔بہار حکومت نے چھٹے مرحلے کے تحت 32,714 آسامیوں پر سیکنڈری اور ہائی سیکنڈری اساتذہ کی بھرتی کے عمل کو مکمل کرنے کے لیے اپنی سطح سے کوششیں تیز کر دی ہیں ۔ اس کے لیے حکومت نے پٹنہ ہائی کورٹ میں خصوصی چھٹی کی درخواست دائر کی ہے ۔

ہفتہ کو تعلیم اور پارلیمانی امور کے وزیر وجے کمار چودھری نے کہا کہ اس عرضی کے ذریعے معزز ہائی کورٹ سے درخواست کی گئی ہے کہ نیا تعلیمی سیشن اگلے ماہ سے شروع ہو گا ۔ پنچایت سطح پر قائم کیے گئے لئے سیکنڈری اور ہائیر سیکنڈری اسکولوں میں اساتذہ کی کمی ہے ۔ لہذا اساتذہ کی کمی کو دور کرنے اور بچوں کی تعلیم کے مفاد میں چھٹے مرحلے کے ٹیچر یلانگ کے عمل کو مکمل ہونے دیا جائے ۔

یہ بھی پڑھیں

گھریلو علاج / Home Remedies : جسم پر جگہ جگہ خارش شروع ہو گئی ہے تو ان 5 گھریلو ٹوٹکوں پر کریں عمل ، آپ کو خارش کے مسئلے سے مل جائے گی نجات

استاد کی تقرری جاری رکھنے کے لیے نظرثانی کی درخواست دائر

۔STET پاس امید واروں کو ملے موقع

محکمہ تعلیم نے ریاست کے ثانوی اور اعلیٰ ثانوی اسکولوں میں چھٹے مرحلے کے تحت تقریباً 32 ہزار آسامیوں پر تقرری کے عمل کو مکمل کرنے کے لیے خصوصی اجازت کے لیے پٹنہ ہائی کورٹ میں نظرثانی کی درخواست دائر کی ہے۔ وزیر تعلیم وجے کمار چودھری نے ہفتہ کو ‘ہندوستان’ کو یہ اطلاع دی۔ انہوں نے کہا کہ ریاستی حکومت قابل اساتذہ کی تقرری کے بارے میں ایماندار ہے۔ نیا سیشن اپریل سے شروع ہونے جا رہا ہے۔ نئے سیشن سے پہلی بار تقریباً تین ہزار سکولوں میں گیارہویں جماعت پڑھائی جائے گی۔ ان سکولوں میں اساتذہ کی اشد ضرورت ہے۔ چھٹے مرحلے میں بھرتی کا عمل آخری مرحلے میں جاری تھا، یہ عمل تقرری خطوط کی تقسیم تک پہنچ گیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں

گھر بیٹھے آدھار کارڈ میں اپنا موبائل نمبر یا نام، پتہ تبدیل کریں، جانیں یہ آسان طریقہ

आरबीआई ने पेटीएम पेमेंट्स बैंक को नए खाते खोलने से रोककर झटका दिया।

اس کے بعد معزز عدالت کے حکم سے ملتوی ہونا اہل امیدواروں کے ساتھ ساتھ حکومت کے لیے بھی افسوسناک ہے۔ اس لیے ہم نے معزز عدالت سے اس معاملے پر نظر ثانی کی درخواست کی ہے۔ خیال رہے کہ چھٹے مرحلے کے تحت 17 اور 18 فروری کو تقرری نامہ تقسیم کیا جانا تھا۔ اس کے لیے میرٹ لسٹ تیار ہوئی اور اس کی منظوری بھی ہو گئی۔

دریں اثنا عدالت نے 2019 میں STET پاس کرنے والوں کو بھی اسی مرحلے میں ملازمت میں شامل کرنے کا فیصلہ کیا۔ جس کے بعد محکمہ تعلیم کو جلد بازی میں 32000 سیکنڈری اور ہائر سیکنڈری اساتذہ کی تقرری کا عمل ملتوی کرنا پڑا۔ عدالت کے حکم کی تعمیل میں ایسے امیدواروں کو ملازمت کے چھٹے مرحلے کا حصہ بننے کے لیے درخواست سے لے کر تمام عمل کو مکمل کرنا ہوگا۔

قومی ترجمان کا ٹیلیگرام گروپ جوائن کرنے کے لیے یہاں کلک کریں!

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button