Uncategorized

جلد کی دیکھ بھال: گرمیوں میں چہرہ دھوتے وقت ان تجاویز پر کریں عمل، جلد دن بھر چمکدار نظر آئے گی

گرمیوں میں جلد کی دیکھ بھال: گرمیوں میں جلد کا خاص خیال رکھنا بہت ضروری ہو جاتا ہے۔ یہ وہ موسم ہے جس میں جلد کو سب سے زیادہ دھوپ کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور گرد و غبار اور پسینہ بھی اس میں اپنا حصہ ڈالتا ہے۔ ایسی حالت میں جلد کی بہتر طریقے سے دیکھ بھال کرنی چاہیے۔

گرمیوں میں چہرے کی نمی اور چمک برقرار رکھنے کے لیے آپ فیس واش سے متعلق کچھ ٹوٹکے استعمال کر سکتے ہیں۔ یہ ٹوٹکے بغیر کسی محنت کے آپ کا مسئلہ حل کر دیں گے۔

یہ بھی پڑھیں

موسم گرما میں جلد کی دیکھ بھال کی تجاویز | موسم گرما میں جلد کی دیکھ بھال کے نکات

چہرہ دھونے میں احتیاط

گرمیوں میں بہت زیادہ پسینہ آتا ہے جس کی وجہ سے لوگ اکثر وقتا فوقتا فیس واش سے منہ دھونے لگتے ہیں جبکہ ایسا نہیں کرنا چاہیے۔ چہرے کو بار بار فیس واش سے دھونے سے چہرہ زیادہ تیل والا ہو جاتا ہے کیونکہ جب بھی چہرہ دھویا جاتا ہے تو جلد زیادہ سیبم بناتی ہے۔ سیبم چہرے پر تیل پیدا کرتا ہے۔ دن میں دو تین بار سادہ پانی سے چہرہ دھونا ٹھیک ہے لیکن فیس واش سے نہیں۔

سن اسکرین کا صحیح استعمال

چہرہ دھونے کے بعد موئسچرائزر اور سن اسکرین لگانا نہ بھولیں۔ یہ دونوں چیزیں جلد کی غذائیت کے لیے بہت ضروری ہیں۔ چاہے سارا دن دفتر کے اندر ہی بیٹھنا پڑے لیکن پھر بھی سن اسکرین لگانا بند نہ کریں۔

پسینے سے دوری

چہرے پر بار بار پسینے والے ہاتھ نہ لگائیں۔ اس سے چہرے پر جلن پیدا ہوتی ہے۔ اس صورت میں، ریش ہونے کے امکانات بڑھ جاتے ہیں.

رات کو نمی

رات کو اپنی جلد کو اچھی طرح دھوئیں اور موئسچرائزر لگانے کے بعد ہی سو جائیں۔ یہ خشک راتوں میں بھی آپ کی جلد کی نمی کو برقرار رکھے گا۔

اعلان دستبرداری : یہ مواد بشمول مشورے، صرف عام معلومات فراہم کرتا ہے۔ یہ کسی بھی طرح مستند طبی رائے کا متبادل نہیں ہے۔ مزید تفصیلات کے لیے ہمیشہ کسی ماہر یا اپنے ڈاکٹر سے رجوع کریں۔ قومی ترجمان اس معلومات کی ذمہ داری قبول نہیں کرتا۔

یہ بھی پڑھیں

گھر بیٹھے آدھار کارڈ میں اپنا موبائل نمبر یا نام، پتہ تبدیل کریں، جانیں یہ آسان طریقہ

आरबीआई ने पेटीएम पेमेंट्स बैंक को नए खाते खोलने से रोककर झटका दिया।

قومی ترجمان کا ٹیلیگرام گروپ جوائن کرنے کے لیے یہاں کلک کریں!

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button