ارریہارولاہم خبریںاورنگ آبادبانکابکسربھاگلپوربھوجپوربہاربیگوسراےپٹنہپورنیہتعلیم و روزگارجموئیجہان آبادحاجی پور، ویشالیدربھنگہروہتاسسارنسپولسمستی پورسہرسہسیتامڑھیسیوانشیخوپورہشیوہرکٹیہارکشن گنجکھگڑیاکیمورگوپال گنجگیالکھی سرائےمدھوبنیمدھے پورامشرقی چمپارنمظفر پورمغربی چمپارنمونگیرنالندہنواداویشالی

جاب الرٹ : اردو اساتذہ کی تقرری کے لیے تیار ہو رہا ہے مسودہ

بہار میں اردو اساتذہ کی پہلے ہی دو قسمیں ہیں۔ پہلی قسم مدارس میں اردو اساتذہ کی ہے۔ دوسری قسم اردو اسکولوں میں تعینات اساتذہ کی ہے۔ اب نئی تعلیمی پالیسی کے تحت جنرل اسکولوں میں اردو اساتذہ کی تقرری کی جائے گی۔جس کے لیے مسودہ تیار ہو رہا ہے ۔پڑھیں مکمل خبر……

پٹنہ : پرائمری سے ہائر سیکنڈری تک کے اسکولوں میں اردو اساتذہ کی بحالی کے لیے محکمہ تعلیم کے ذریعے مسودہ تیار کیا جا رہا ہے۔ اس مسودے کی تیاری آخری مرحلے میں ہے۔

درحقیقت اردو اساتذہ کی تقرری نئی تعلیمی پالیسی 2020 کے تحت کی جانی ہے۔

بہار محکمہ تعلیم کسی بھی وقت اس مسودے کو گرین سگنل دے سکتی ہے۔ ماہرین کے مطابق جو مسودہ تیار کیا جا رہا ہے اس میں اردو اساتذہ کی بحالی کے عمل سے لے کر ان کی سروس شرائط وغیرہ کو یقینی بنایا جانا ہے۔

دوسری طرف محکمہ کو بہت سے عملی اور تکنیکی چیلنج درپیش ہیں جن کے حل تلاش کیے جا رہے ہیں۔ فی الحال محکمہ ان اضلاع میں قریب سے مطالعہ کر رہا ہے جہاں اردو اساتذہ کی ضرورت ہو سکتی ہے۔

خیال رہے کہ بہار میں اردو اساتذہ کی پہلے ہی دو قسمیں ہیں۔ پہلی قسم مدارس میں اردو اساتذہ کی ہے۔ دوسری قسم اردو اسکولوں میں تعینات اساتذہ کی ہے۔ اب نئی تعلیمی پالیسی کے تحت جنرل اسکولوں میں اردو اساتذہ کی تقرری کی جائے گی۔ اس لیے ماہرین کی رائے ہے کہ اتنے اسکولوں میں اردو پڑھنے والے بچے کہاں سے آئیں گے؟ فی الحال جس کمیٹی نے مسودہ تیار کیا ہے اس نے ابھی تک اس پر اپنی رپورٹ شیئر نہیں کی ہے۔

اردو اساتذہ کی تقرری، اردو معلم

یہ بھی پڑھ سکتے ہیں : بہار میں اسکولوں کی صورت حال ،مفتی محمد ثناء الہدیٰ قاسمی نائب ناظم امارت شرعیہ پھلواری شریف پٹنہ

قابل ذکر ہے کہ ہائی کورٹ میں سیکنڈری اور ہائر سیکنڈری اسکولوں میں اردو اساتذہ کی بحالی کو لے کر کیس بھی چل رہا ہے۔ ثانوی اور اعلیٰ ثانوی اسکولوں میں اردو اساتذہ کی بحالی کا دیرینہ مطالبہ کیا جا رہا ہے۔ اس مضمون کے مطالعہ کے لیے اساتذہ کی خالی آسامیوں کو پر کرنے کے لیے اردو مضمون کو الگ سے notified نہیں کیا گیا ہے۔

قومی ترجمان
قومی ترجمان
Qaumi Tarjuman
قومی ترجمان

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button