اہم خبریں، تازہ سرخیاں

آج کی اہم خبریں – 11 جنوری 2022

ہریدوار دھرم سنسد میں نفرت انگیز تقاریر کا معاملہ سپریم کورٹ میں پہنچا

نئی دہلی (قومی ترجمان) پارلیمنٹ میں نفرت انگیز تقریر کا معاملہ سپریم کورٹ پہنچ گیا ہے۔ اس معاملے میں سپریم کورٹ نے بھی جلد سماعت کرنے پر رضامندی ظاہر کی ہے۔ چیف جسٹس این وی رمنا نے کہا کہ ہم اس معاملے کی سماعت کریں گے۔ اس معاملے کے بارے میں، سپریم کورٹ میں سینئر وکیل کپل سبل نے کہا، ‘ہم نے ہریدوار میں دھرم سنسد میں ہونے والے واقعات پر مفاد عامہ کی عرضی دائر کی ہے۔

وزیر اعظم کی سیکیورٹی میں کوتاہی کا معاملہ

نئی دہلی: پنجاب میں وزیر اعظم کی سیکورٹی میں کوتاہی کی اعلیٰ سطحی انکوائری ہوگی۔ سپریم کورٹ سیکیورٹی میں کوتاہی کی تحقیقات کے لیے سپریم کورٹ کے ریٹائرڈ جج کی سربراہی میں ایک اعلیٰ سطحی کمیٹی تشکیل دے گی۔ عدالت نے کہا کہ جلد ہی اس معاملے میں حکم جاری کیا جائے گا۔ اس کے ساتھ ہی عدالت نے مرکز اور پنجاب دونوں سے کہا کہ وہ اپنے اپنے پینل کے ذریعہ تحقیقات پر روک لگائیں۔

یہ انتخاب اب %80 بمقابلہ%20 کے درمیان ہے: یوگی آدتیہ ناتھ نے یوپی انتخابات سے پہلے ایک نیا راگ شروع کیا

لکھنؤ: یوپی اسمبلی انتخابات سے پہلے، اتر پردیش کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا کہ یہ انتخاب "80 بمقابلہ 20” کا ہوگا۔ یوگی آدتیہ ناتھ کے ذریعہ بتائے گئے اعداد و شمار تقریباً اتر پردیش میں ہندوؤں اور مسلمانوں کے تناسب سے میل کھاتے ہیں، جہاں اگلے ماہ اسمبلی انتخابات ہونے والے ہیں۔ راجدھانی لکھنؤ میں ایک پرائیویٹ نیوز چینل کے زیر اہتمام ایک پروگرام میں اتر پردیش کے سی ایم یوگی آدتیہ ناتھ سے برہمن ووٹوں سے متعلق سوال پوچھا گیا۔ اس کے جواب میں وزیر اعلیٰ نے کہا کہ ’’الیکشن اس سے بہت آگے بڑھ چکے ہیں، اب یہ الیکشن 80 بمقابلہ 20 ہے‘‘۔

عمران مسعود نے کانگریس چھوڑ کر ایس پی میں شامل ہونے کا کیا اعلان،’ٹکڑے ٹکڑے’ والے اپنے بیان کی وجہ سے تھے مشہور

اترپردیش اسمبلی انتخابات کی تیاریوں میں مصروف پرینکا گاندھی اور ان کی پارٹی کو انتخابات سے ایک ماہ قبل بڑا جھٹکا لگا ہے۔ مغربی اترپردیش کے کانگریس لیڈر عمران مسعود نے کانگریس چھوڑ کر سماج وادی پارٹی میں شامل ہونے کا باضابطہ اعلان کردیا ہے عمران مسعود نے آج اپنے حامیوں کا اجلاس مشاورت کے لیے بلایا تھا جس کے بعد انہوں نے یہ اعلان کیا ہے۔عمران مسعود کافی عرصے سے ایس پی جانے کا عندیہ دے رہے تھے۔ وہ صاف مانتے ہیں کہ اتر پردیش میں سیدھی لڑائی بی جے پی اور ایس پی کے درمیان ہے۔

کورونا مریض کے رابطے میں آنے والوں کو ٹیسٹ کرانے کی ضرورت نہیں،جب تک کہ نہ ہو کوئی زیادہ خطرہ :حکومت

مرکزی حکومت نے کہا ہے کہ کورونا مریضوں کے رابطے میں آنے والے لوگوں کو کووڈ ٹیسٹ کرانے کی ضرورت نہیں ہے، جب تک کہ ان کی شناخت ہائی رسک شخص کے طور پر نہ ہو۔ زیادہ خطرے سے مراد وہ لوگ ہیں جو بڑی عمر یا بیماری میں مبتلا ہیں۔یہ بات انڈین کونسل آف میڈیکل ریسرچ کی ایڈوائزری میں کہی گئی ہے۔ آئی سی ایم آر نے جانچ کی اس نئی حکمت عملی کے بارے میں ایک ایڈوائزری جاری کی ہے۔اس میں کہا گیا ہے کہ علامات والے مریضوں کی جلد از جلد شناخت کی جانی چاہیے اور انہیں مناسب وقت پر تنہائی کے ساتھ مناسب علاج دیا جانا چاہیے۔ بزرگوں اور بیماریوں کے شکار افراد میں انفیکشن کی شناخت کو تیز کریں۔ خاص طور پر ہائی بلڈ پریشر، پھیپھڑوں اور گردے کی بیماریاں، موٹاپا وغیرہ۔

یوگی سرکار کے وزیر کے ادھورے پل کے افتتاح پر بھڑکی سپا

اتر پردیش اسمبلی انتخابات کی تاریخوں کا اعلان ہوتے ہی اقتدار اور اپوزیشن جماعتوں میں الزامات اور جوابی الزامات کا دور بھی تیز ہوگیا ہے۔ سماج وادی پارٹی نے اترپردیش کے وزیر خزانہ اور پارلیمانی امور کے وزیر سریش کھنہ پر شاہجہاں پور میں آدھے تیار شدہ پل کا افتتاح کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ یہ کام عوام کو بے وقوف بنانے کے لیے کیا گیا ہے۔

ڈی ڈی ایم اے کی میٹنگ ختم ، کورونا کی وجہ سے دہلی میں لگ سکتی ہیں کچھ اور پابندیاں: ذرائع

ملک کی راجدھانی میں کوویڈ کی صورتحال پر غور کرنے کے لیے دہلی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کی میٹنگ ختم ہو گئی ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ دہلی میں کچھ اور پابندیاں لگ سکتی ہیں۔ دہلی کے کسی ریستوران میں کھانے پر پابندی لگ سکتی ہے حالانکہ ہوم ڈیلیوری اور ٹیک اوے کی سہولت ریسٹورنٹ سے چلائی جا سکتی ہے۔ اتوار 9 جنوری کو ہی دہلی میں 22 ہزار سے زیادہ کورونا متاثر مریض پائے گئے ہیں۔ دہلی ہیلتھ بلیٹن کے مطابق دہلی میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 22,751 نئے کورونا کیسز پائے گئے ہیں۔ جبکہ مثبت شرح 23.53 فیصد تک پہنچ گئی ہے۔

اکھلیش کی ریلی میں بھیڑ دیکھ یوگی سرکار خوف زدہ: یوپی میں ریلی پر پابندی پر بولے رام گوپال یادو

نئی دہلی: سماج وادی پارٹی کے لیڈر رام گوپال یادو نے شمالی اسمبلی انتخابی مہم میں ریلیوں پر الیکشن کمیشن کی طرف سے لگائی گئی پابندی پر سوال اٹھائے ہیں۔ رام گوپال یادو کا کہنا ہے کہ اکھلیش یادو کی ریلیوں میں بھیڑ دیکھ کر حکومت گھبرا گئی ہے۔ اور اس کے مطابق انتظامات کیے جا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ووٹر سائیکل کو پہچانتا ہے اور خود سائیکل کا بٹن دبائے گا۔

سی ایم یوگی کا فیصلہ، جانیے کسے ملے گی سات دن کی چھٹی، نہیں کٹے گی تنخواہ۔

یوپی میں مسلسل بڑھتے ہوئے کورونا کیس کو دیکھتے ہوئے حکومت سختی بڑھا رہی ہے۔ دریں اثنا، وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے ریاست کے تمام سرکاری اور نجی دفاتر میں 50 فیصد لوگوں کی موجودگی کا حکم دیا ہے۔ لکھنؤ میں پیر کو ٹیم-09 کے ساتھ میٹنگ میں وزیر اعلیٰ نے کووڈ کی صورتحال کا جائزہ لیا۔ انہوں نے ہدایات دی ہیں کہ تمام سرکاری اور نجی دفاتر میں ایک وقت میں زیادہ سے زیادہ 50 ملازمین کی موجودگی کا نظام نافذ کیا جائے۔ ‘ورک فرام ہوم’ کو فروغ دینے پر بھی زور دیا گیا تاکہ کام میں کوئی تکلیف نہ ہو۔ ریاستی حکومت کے نئے کووڈ گائیڈ لائن کے مطابق، اگر پرائیویٹ سیکٹر کے دفاتر کا کوئی ملازم کوویڈ پازیٹو نکلا، تو اسے 07 دن کی کم از کم تنخواہ کے ساتھ چھٹی دی جائے گی۔

جی میل پہلی ایپ نہیں ہے جس نے 10 بلین ڈاؤن لوڈز کا سنگ میل عبور کیا ہو۔ اس سے پہلے بھی تین ایسی ایپس آ چکی ہیں

جی میل سے پہلے گوگل پلے سروسز، یوٹیوب اور گوگل میپس نے بھی 10 بلین ڈاؤن لوڈز کا سنگ میل عبور کیا۔ اینڈرائیڈ پولیس کی ایک رپورٹ کے مطابق جی میل چوتھی ایپ ہے جسے 10 ارب بار ڈاؤن لوڈ کیا گیا۔


دلچسپ بات یہ ہے کہ چاروں ایپس گوگل کی ہیں جو اینڈرائیڈ اسمارٹ فونز میں 10 بلین ڈاؤن لوڈ کا ہندسہ عبور کر چکی ہیں۔ جی میل کی بات کریں تو یہ ایپ پوری دنیا میں مقبول ہو چکی ہے۔ عام طور پر لوگ ذاتی ای میل کے لیے Gmail کا سہارا لیتے ہیں۔ یہی نہیں، اگر آپ اینڈرائیڈ اسمارٹ فون استعمال کرنا چاہتے ہیں تو آپ کے پاس ایک طرح سے جی میل آئی ڈی ہونا ضروری ہے۔ بصورت دیگر، آپ Play Store تک رسائی بھی حاصل نہیں کر پائیں گے۔

مرکزی حکومت نے اس اسکیم کی 10ویں قسط جاری

(پی ایم کسان 10ویں قسط) پی ایم کسان سمان ندھی کے اہل استفادہ کنندہ کو بھیج دی ہے۔ اگر آپ اس اسکیم کے سبسکرائبر ہیں، تو اب تک آپ کے اکاؤنٹ میں 2,000 روپے کی قسط جمع ہوچکی ہوگی۔ تاہم کئی بار بینک سے رقم کے کریڈٹ کا پیغام نہیں آتا۔ایسے میں آپ پریشان ہوں گے کہ آپ کے اکاؤنٹ میں قسط آئی ہے یا نہیں۔ اس بارے میں فکر کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ آپ پی ایم کسان یوجنا کی ویب سائٹ کے ذریعے اسٹیٹس چیک کر سکتے ہیں۔ اس کا طریقہ کافی آسان ہے۔ تاہم حال ہی میں اس میں ایک تبدیلی کی گئی ہے۔ اس کے بعد اس کا عمل بدل گیا ہے۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button